اقدامات نہ اٹھائے تو گلوبل وارمنگ کا سامنا ہو سکتا ہے

آئی جی پی خیبر پختونخوا نے پولیس کلب کوہاٹ میں پودا لگا کر شجر کاری مہم میں شرکت کی

کوہاٹ

انسپکٹر جنرل آف پولیس خیبر پختونخوا ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے کہا ہے کہ شجر کاری معاشرے کے ہر فرد کی ذمہ داری ہے گرین پاکستان کی تکمیل کیلئے ہم سب نے ملکر شجرکاری کے اس مہم کو کامیاب بنانا ہے ۔

درخت لگانا صدقہ جاریہ اور مستقبل میں ماحولیاتی فوائد کا پیش خیمہ ہیں ۔ اگرشجر کاری اورپودوں کی حفاظت کیلئے جامع اقدامات نہیں اٹھائے گئے تو ہ میں گلوبل وارمنگ کاسامنا ہوسکتا ہے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے کوہاٹ کے مختصر دورے کے دوران پولیس کلب کے سبزہ زار میں پودا لگاکر شجر کاری مہم میں شرکت کرنے کے موقع پر کیا ۔

اس موقع پر ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کوہاٹ جاوید اقبال ،پی ایس او صمد خان اور دیگر پولیس افسران بھی آئی جی پی کے ہمراہ تھے ۔

انہوں نے کہا کہ پودے انسانوں کیلئے اللہ تعالیٰ کی طرف سے ایک بہت بڑی نعمت ہے جس سے نہ صرف آکسیجن حاصل کی جاتی ہے بلکہ ماحولیاتی نظام کوفروغ دینے ،ان کے تحفظ،ہوا اور پانی کی کیفیت کو بہتربنانے،ٹھوس فضلہ کوکم کرنے اور قدرتی وسائل کو تحفظ فراہم کرنے میں اہم کردار اداکرتی ہےں ۔

آئی جی پی نے کہا کہ شجر کاری اور پودوں کی حفاظت معاشرے کے ہر فرد کی ذمہ داری ہونی چاہئیے ۔ انہوں نے جنگلات کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ شجرکاری موسمیاتی تبدیلی کو روکنے کا واحد ذریعہ ہے ،گرین پاکستان مہم کو عملی جامہ پہنانے کیلئے ضروری ہے کہ اس مہم کو کامیابی سے ہمکنار کرنے کیلئے کوئی دقیقہ فروگزاشت نہ کیاجائے ۔

آئی جی پی خیبرپختونخوا ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی نے قبل ازیں قبائلی ضلع کرم کا ایک روزہ تفصیلی دورہ کیاجہاں پاڑا چنار کے مقام پر پولیس کے ٹریننگ کیمپس پہنچنے پر انکا شاندار استقبال کیا گیا ۔ آئی جی پی کو سلامی پیش کی گئی اور تربیتی سیشن پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ پولیس میں ضم شدہ لیویز اور خاصہ دار فورس کے اہلکار پوری تندہی سے پیشہ ورانہ تربیتی عمل میں مگن ہیں ۔

ٹیگز

متعلقہ پوسٹس

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
error: Content is protected !!
Close