پاکستان کیخلاف منفی پراپیگنڈہ ختم کرنا چاہتی ہوں،تبسم سلیم

اسلام آباد
مس ایلیگنٹ فرانس و انٹرنیشنل ہیومن رائٹس کمیشن آف پاکستان کی ایمبیسڈر ایٹ لارج تبسم سلیم نے کہا ہے کہ اپنے مک پاکستان سے دلی محبت ہے۔ فرانس اور پاکستان کے درمیان ثقافتی تعلقات کی فروغ کے لئے مثبت کردار ادا کرنا چاہتی ہوں۔ انہوں نے کہا کہ غیر سرکاری تنظیم’الفا پرو‘ کے تعاون سے کشمیر کی ثقافت وتمدن پر ایک ڈاکومنٹری فلم بنائی ہے جودو ماہ بعد فرانس میں نمائش کے لئے پیش کی جائے گی۔ اس ڈاکومنٹری فلم کا مقصد دنیا بھر میں پاکستان سے متعلق منفی سوچ کو ختم کرنا ہے تبسم سلیم نے کہا کہ فرانس سے اپنے ساتھ وفدلائی ہوں۔ جنہوں نے پاکستانی عوام کے بارے میں اچھے تاثرات دیئے۔فرانس سے آئے ہوئے وفد میں فرنچ خاتون صحافی مورالی ٹونیا، صدر بی ڈی ایم ٹی وی فرانس ابراہیم سوریل، پروفیشنل باگسر برائس کیڈنٹ اور الفا پر و کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر عثمان فاروق نے نیشنل پریس کلب اسلام آبادمیں مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر دنیا کی خوبصورت ترین وادی ہے۔تبسم سلیم نے کہا کہ اپنے آبائی ملک پاکستان سے دلی محبت ہے، پاکستان سے متعلق بنائی گئی منفی سوچ کو ختم کرنا چاہتی ہوں۔فرانس سے وفد کو لائی ہوں تاکہ وہ اپنی آنکھوں سے دیکھ سکیں کہ پاکستان اور کشمیر کے لوگ پیار محب کرنے والے ہیں۔ صدر بی ڈی ایم ٹی وی فرانس ابراہیم سوریل نے کہا کہ پاکستان آکر بہت خوشی ہوئی، فرانس جاکر اپنے عوام کے سامنے پاکستان کا امن پسندتصور پیش کروں گا پروفیشنل باگسر برائس کیڈنٹ نے کہاکہ مجھے اس وقت بہت خوشی ہوئی جب کشمیری عوام سے ملا۔ وہا ں کی ثقافت وتمدن بہت خوبصورت ہیں۔فرنچ خاتون صحافی نے کہا کہ کشمیر کی ثقافت پر بنائی گئی ویڈیو سے کشمیر کی پہچان میں اضافہ ہوگا الفا پرو کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر عثمان فاروق نے کہا کہ ڈاکومنٹری فلم کے ذریعے پاکستان اور فرانس کے درمیان ثقافتی تعلقات کو فروغ ملے گا۔ پاکستان اور فرانس کے میڈیا کوریڈوربنانے کے خواہاں ہیں جس سے دونوں ملکوں کے درمیان کلچرل ایکسچنچ ہوگا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں