کوہاٹ: پی ٹی آئی کے امیدوار شش وپنج کا شکار، بجلی کس پر گرے گی

کوہاٹ(خصوصی رپورٹ)عام انتخابات کے دن قریب آرہے ہیں اور تمام پارٹیوں کے امیدواروں نے بھر پور تیاری کا آغاز کر دیا ہے جبکہ آذاد امیدوار بھی کسی سے پیچھے نہیں، ان حالات میں پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار ابھی تک شش و پنج میں ہیں کچھ ٹکٹ کے لیے پر امید ہیں تو کچھ ٹکٹ جانے کے خوف میں مبتلا ہیں.
صوبائی حلقہ پی کے 82 اور پی کے 80 کے امیدوار اس صورتحال سے کچھ زیادہ ہی شکار ہیں جبکہ پی کے 81 سے بھی داؤد آفریدی نے نظرثانی کے لیے درخواست دے رکھی ہے کسی حد تک مطمیئن ہیں کہ عمران خان ان کی درخواست پر ہمدردانہ غور کرتے ہوئے انہیں صوبائی اسمبلی کے ٹکٹ سے نوازیں گے. تاہم باقی ماندہ دو حلقوں کی صورتحال کچھ زیادہ ہی دلچسپ ہے.
حلقہ پی کے 80 میں پاکستان تحریک انصاف کے ضلعی صدر آفتاب اقبال پارٹی ٹکٹ سے محروم ہیں اور ان کا خیال ہے کہ شہریار آفریدی ان کے حق کے لیے آخری حد تک جا کر انہیں ٹکٹ دلوائیں گے جبکہ پی کے بیاسی میں جب سابق گورنرسید افتخار حسین شاہ کو ٹکٹ سے محروم کیا گیا تو ان کے چاہنے والوں نے کافی شور مچایا اور پاکستان تحریک انصاف پر شدید تنقید کی جس کے بعد ٹکٹ کا باقاعدہ اعلان نہ کیا جا سکا اور امیدواروں کی نامزدگی پر نظر ثانی کا فیصلہ کیا گیا جس کے بعد ابھی تک حلقہ پی کے 80 سے آفتاب عالم پر امید اور ولید ظفر خوف کا شکار ہیں جبکہ شہری حلقے میں بھی یہی حالات ہیں دیکھتے ہیں کہ نتیجہ کیا نکلتا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں